محبت کی یادگارمیں داخلےمحدودکرنےکافیصلہ

آگرہ: بھارت میں تاج محل آنے والوں کو یادگار دیکھنے کا داخلہ محدود کرنے کا فیصلہ کیا جارہاہے۔

تاج محل میں داخل ہونےوالوں کی تعداد محدود کرنےکافیصلہ عمارت کو کسی نقصان پہنچنے سے بچانےکی وجہ سے کیاگیاہے۔

انتظامیہ کاکہناہےکہ مستقبل میں صرف 40 ہزار لوگوں کو یومیہ تاج محل آنے کی اجازت دی جائے گی۔ لوگوں کی بڑی تعداد روزانہ تاج محل کارخ کرتی ہے جس کے باعث تاج محل کی عمارت کے سنگ مرمر کونقصان پہنچ رہاہے۔ عمارت کی مستقل صفائی بھی انتہائی ضروری ہوتی ہے۔

تاج محل آنےوالوں کی تعداد ویک اینڈزپر70ہزارتک پہنچ جاتی ہے۔ غیرملکی سیاحوں کو تاج محل آنےکےلیےایک ہزار روپےکاٹکٹ لینا پڑتاہے۔ مقامی سیاحوں کےلیے یہ ٹکٹ صرف چالیس روپےکاہوتاہے۔ اگر سیاح تاج محل کےمخصوص حصوں تک رسائی حاصل کرنا چاہتے ہیں تو انھیں مزید مہنگا ٹکٹ لینا پڑتاہے۔

انتظامیہ کاکہنا ہےکہ تاج محل کی عمارت کی مستقبل دیکھ بھال سے ہی اس عمارت کا حسن ماند پڑنےسے روکاجاسکتاہے۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.