سعودیہ عرب میں نرس کی نومولود بچے کیساتھ سفاک حرکت

ریاض : سعودی شہر طائف کے اسپتال میں نومولود بچے کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کرنے اور اس کی شکل بگاڑنے والی نرس کو ملازمت سے برطرف کردیا گیا۔ سماجی رابطوں کی سائٹ پر نومولود بچے کے ساتھ نرس کی سفاک حرکت اور اس کی شکل بگاڑنے پر لوگوں کی جانب سے شدید احتجاج اور تنقید کا نشانہ بنایا گیا تھا۔

حکام کے عمل میں معاملہ آیا تو واقعہ کی تحقیقات شروع ہوئیں۔ اطلاعات کے مطابق طائف شہر کے اسپتال میں نرس نے شیرخوار بچّے کے چہرے کے ساتھ بے ہودہ قسم کی تفریح کی اور مسلسل اس کی شکل بگاڑ بگاڑ کر ہنستی رہی۔

بچے کے ساتھ بدتمیزی کے دوران پس منظر میں موجود دیگر نرسوں کے ہنسنے کی آوازیں بھی سنائی دے رہی ہیں۔ سوشل میڈیا پر اس وڈیو کے پھیلنے کے بعد صارفین میں غم و غصّے کی لہر دوڑ گئی، جس کے بعد طائف کے محکمہ صحت نے نوٹس لے لیا اور تحقیقاتی کمیٹی بنا دی۔

سعودی عرب میں ایک شیر خوار بچے کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کرنے پر تین نرسوں کو تا حکم ثانی کام سے روک دیا گیا ہے۔

کمیٹی نے معاملے کی ذمّے دار نرسوں کے گروپ کو شناخت کر لیا ہے اور تحقیقات مکمل ہونے تک انہیں فوری طور پر کام سے روک دینے کی ہدایت جاری کی ہے۔


اپنی راہےکااظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.